بنیادی صفحہ / تازہ خبریں / غیر قانونی طور پر تعمیر شدہ تمام مذہبی مقامات کے تحفظ کے لئے اسمبلی میں منظور ہوا’کرناٹکا مذہبی مقامات تحفظ قانون’

غیر قانونی طور پر تعمیر شدہ تمام مذہبی مقامات کے تحفظ کے لئے اسمبلی میں منظور ہوا’کرناٹکا مذہبی مقامات تحفظ قانون’

Print Friendly, PDF & Email

بینگلورو: 22 ستمبر، 2021 (بھٹکلیس نیوز بیورو) ریاست کے عوامی مقامات پر غیر قانونی طور پر تعمیر  کیے گئے تمام مذہبی مقامات کے تحفظ کے لئے آج  قانون کا مسودہ ریاستی اسمبلی نے منظور کر لیا ہے ۔

واضح رہے کہ کچھ دنوں قبل عوامی جگہوں پر تعمیر شدہ غیر قانونی مذہبی مقامات منہدم کرنے کے لئے دی گئی سپریم کورٹ کی ہدایت کے پس منظر میں میسور کے ننجن گوڈو میں ایک قدیم مندر ڈھا دیا گیا تھا ۔ جس کے بعد ہندو تنظیموں کی جانب سے سخت احتجاج  درج کرتے ہوئے بی جے پی حکومت کو آڑ ے ہاتھوں لیا جارہا تھا ۔

اسی کو دیکھتے ہوئے حکومت نے فوری اقدام کیا اور مذہبی مقامات تحفظ قانون – 21 کا مسودہ اسمبلی سیشن میں پیش کیا جسے بحث کے بعد آج منظوری دی گئی ۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*