بنیادی صفحہ / تازہ خبریں / کیا وزیر اعلیٰ ایڈی یورپا کو اسی ہفتے استعفی دینا پڑے گا؟ قیادت کے بحران کو سلجھانے میں ارون سنگھ کی ناکامی کے بعد وزیر اعلیٰ دہلی طلب

کیا وزیر اعلیٰ ایڈی یورپا کو اسی ہفتے استعفی دینا پڑے گا؟ قیادت کے بحران کو سلجھانے میں ارون سنگھ کی ناکامی کے بعد وزیر اعلیٰ دہلی طلب

Print Friendly, PDF & Email

بینگلورو: 21 جون، 2021(سالار نیوز/بھٹکلیس نیوز بیورو)کرناٹک میں بی جے پی میں قیادت کی تبدیلی کے مطالبہ کو لے کر جو سیاسی بحران کھڑا ہو ا ہے وہ جلد ختم ہو تا نظر نہیں آ رہا ہے۔ بتایا جا رہا ہے کہ اس معاملہ میں بی جے پی اعلیٰ کمان سے تبادلہ خیال کیلئے وزیر اعلیٰ بی ایس ایڈی یورپا اگلے ہفتہ دہلی کے دورے پر جانے والے ہیں۔امکان ہے کہ ان کے اس دورہ دہلی کے دوران بی جے پی اعلیٰ کمان کی طرف سے ان کو استعفیٰ دینے کی ہدایت مل سکتی ہے۔

قیادت میں تبدیلی کے مطالبہ کے بعد کرناٹک میں بی جے پی امورکے انچارج اورن سنگھ نے بنگلور پہنچ کر تین دن تک اراکین اسمبلی اور وزراء سے تبادلہ خیال کیا اور ان کے ذریعہ انہوں نے جو رائے اکٹھاکی ہے اس پر مشتمل ایک رپورٹ انہوں نے بی جے پی کے قومی صد ر جے پی نڈا اور مرکزی وزیر داخلہ امیت شاہ کو پیش کی ہے جس کے بعد وزیر اعلیٰ ایڈی یورپا نے اعلان کیا ہے کہ وہ اگلے ہفتہ پارٹی کے مرکزی قائدین سے بات چیت کیلئے دہلی جائیں گے۔

بتایا جاتا ہے کہ ایڈی یورپا کو وزیر اعلیٰ کے عہدے سے بے دخل کرنے پارٹی کے متعدد اراکین اسمبلی نے نہ صرف ارون سنگھ کے سامنے مطالبہ پیش کیا بلکہ ریاست کے انتظامیہ میں ایڈی یورپا کے دوسرے فرزند وجیندرا کی بے جا مداخلت پر کئی وزراء نے بھی سخت برہمی کا اظہار کیا اور کہا کہ اس سے پارٹی کی ریاست میں ساکھ بری طرح متاثر ہور رہی ہے۔ وجیندرا کے خلاف کرپشن اوراقتدار کے غلط استعمال کے متعدد الزامات کے سبب ریاستی حکومت کو بدنامی اٹھانی پڑ رہی ہے۔

وزیر اعلیٰ ایڈی یورپا سے بارہا کہا جا چکا ہے کہ وہ انتظامیہ کے امور سے وجیندرا کو دور رکھیں لیکن انہوں نے اس پر توجہ نہیں دی۔ قیادت میں تبدیلی کے مطالبات کے بعد بی جے پی انچارج ارون سنگھ نے جس طرح اراکین اسمبلی کی رائے معلوم کرنے سے پہلے ہی بیان دے دیا کہ قیادت میں کوئی تبدیلی نہیں ہو گی اس پر بھی اراکین اسمبلی کی خاصی تعداد ناراض ہے اور ان کی طرف سے کرناٹک کے انچارج کو بدلنے کا بھی مطالبہ کیا جا چکا ہے جس کے بعد گھبرا کر ارون سنگھ نے پارٹی اعلیٰ کمان کے سامنے اراکین اسمبلی کی رائے لینے کے بعد رپورٹ پیش کی ہے۔

مانا جا رہا ہے کہ جے پی نڈا اور امیت شاہ سے ملاقات کے دوران ایڈی یورپا کو یہ ہدایت مل سکتی ہے کہ وہ عہدہ چھوڑ دیں۔ یہ بھی مانا جا رہا ہے کہ وزیر اعلیٰ ایڈی پورپا نے گزشتہ ہفتہ ارون سنگھ کی موجود گی میں اس شرط پر استعفیٰ دینے کیلئے آمادگی ظاہر کی کہ وجیندرا کو نائب وزیر اعلیٰ بنایا جائے اور انہیں توانائی کا طاقتور قلمدان دیا جائے۔ لیکن سمجھا جارہا ہے کہ بی جے پی اعلیٰ کمان ایڈی یورپا کے ایسے کسی مطالبہ کو ماننے کیلئے تیار نہیں۔ ریاستی بی جے پی کے حلقوں میں مانا جا رہا ہے کہ دہلی آنے کیلئے بی جے پی دفتر سے ایڈی یورپا کو کسی بھی وقت بلاوا آ سکتا ہے۔

ان کے دورے کے مرحلہ میں وہ وزیر اعظم مودی، وزیر داخلہ امیت شاہ اور اور پارٹی کے صدر جے پی نڈا سے ملیں گے۔ ان ملاقاتوں کے دوران ممکن ہے کہ قیادت کے مسئلہ پر بات چیت ہو گی اور نڈا اور امیت شاہ کی طرف سے وزیر اعلیٰ کومستقبل کے لائحہ عمل کے متعلق واضح ہدایت دے دی جائے گی۔

بتایا جاتا ہے کہ مرکزی قیادت نے ایڈی یورپا کو وزیر اعلیٰ کی کرسی چھوڑنے کے عوض فوری طور پر کسی ریاست کا گورنر مقرر کرنے کا آفر دیا ہے۔ مودی، امیت شاہ اور نڈا سے ملاقات کے دوران ممکن ہے کہ ا س آفرکے بارے میں بات چیت کی جائے۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*

 

x

Check Also

سعودی عرب کا کورونا سے متعلق نئی سخت سفری پابندیوں کا اعلان

ریاض: سعودی عرب میں کورونا سے خطرناک حد تک متاثر ہونے والے ...