بنیادی صفحہ / کیریر اور تعلیمی خبریں / انڈا دور کرے گا قلت تغذیہ، ذیابیطس میں مبتلا افراد کے لئے مفید

انڈا دور کرے گا قلت تغذیہ، ذیابیطس میں مبتلا افراد کے لئے مفید

Print Friendly, PDF & Email

نئی دہلی: ملک میں قلت تغذیہ، خون کی کمی اور ذیابیطس کے بڑھتے ہوئے مسائل کو متوازن غذا کے ذریعہ دور کرنے کے مقصد کے ساتھ ’ڈیزائنر ایگ‘ کی پیداوار کو فروغ دیا جا رہا ہے۔

خواتین اور بچوں میں قلت تغذیہ اور خون کی کمی کے سنگین مسائل کو مدنظر رکھتے ہوئے اور بڑی تعداد میں ذیابیطس کے مریضوں کو متوازن غذا فراہم کرانے کے لئے سائنسدانوں نے مرغیوں کے کھانے میں غذائیت سے بھر پور اور مائکرو غذائی اجزا کو شامل کرکے ’ڈیزائنر ایگ‘ تیار کیا ہے۔ یہ انڈا سفید رنگ کا عام انڈوں کی طرح ہے لیکن معیار کی وجہ سے اپنی خاص اہمیت رکھتا ہے۔

نیشنل پولٹری ریسرچ انسٹی ٹیوٹ حیدرآباد کے سائنسدان کنن نے بتایا کہ ذیابیطس میں مبتلا مریضوں کے مسائل کو مدنظر رکھتے ہوئے ایسا ڈیزائنر ایگ تیار کیا گیا ہے جس میں کاربوہائیڈریٹ اور گلوکوز کی مقدار بہت کم ہے۔ ایک انڈے میں ایک فیصد سے کم کاربوہائیڈریٹ ہے۔ ایک انڈے کا وزن 52 اور 60 گرام کے درمیان ہوتا ہے۔

ڈاکٹر کنن نے بتایا کہ ایک سو گرام انڈے میں ایک ملی گرام مائکرو غذائی اجزاء پائے جاتے ہیں۔ اسی طرح دو انڈوں میں چھ گرام پروٹین، ایک انڈے میں چھ گرام چربی اور بڑی مقدار میں ائیرن پایا جاتا ہے ۔ کیلشیم، فاسفورس اور زنک بھی اس میں موجود ہے جو اسے زیادہ غذائیت سے بھرپور بناتا ہے۔ اس میں کئی قسم کے وٹامنز بھی پائے جاتے ہیں، جو قلت تغذیہ کے مسائل کو دور کرنے کے اہل ہیں۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*