بنیادی صفحہ / صوبائی / حج2020 کا اعلان 10 اکتوبر سے10 نومبر تک قبول کی جائیں گی آن لائن درخواستیں
علامتی تصویر

حج2020 کا اعلان 10 اکتوبر سے10 نومبر تک قبول کی جائیں گی آن لائن درخواستیں

Print Friendly, PDF & Email

نئی دہلی-6اکتوبر(ایجنسی) حج 2019 کی کامیابی کا دعویٰ کرتے ہوئے اقلیتی امورکے مرکزی وزیر مختار عباس نقوی نے آج یہاں حج 2020 کا اعلان کیا۔ انہوں نے کہا کہ حج 2020 کے لئے آن لائن درخواست کا عمل 10 اکتوبر سے شروع ہوگا اور 10 نومبر2019 تک جاری رہے گا۔ ڈاکٹر امبیڈکر انٹرنیشنل سنٹر میں ایک پریس کانفرنس کے دوران مختارعباس نقوی نے بتایا کہ آج حج 2019 کی کامیاب تکمیل کی ریویو میٹنگ میں گزشتہ حج امورکا جائزہ لیا گیا اور اگلے حج کی تیاریوں کے سلسلے میں بات کی گئی۔ مختار نقوی نے کہا کہ اس بار حج کا عمل 100 فی صد ڈیجیٹل ہوگا۔ یعنی آئندہ 10 اکتوبر سے 10 نومبر 2019 تک حج بیت اللہ کے لئے عازمین کی آن لائن درخواستیں قبول کی جائیں گی۔انہوں نے بتایا کہ اس بار تمام حاجیوں کو ای ویزہ کی سہولت فراہم کی گئی ہے جسے موبائل ایپ سے بھی ڈاؤن لوڈ کیا جاسکتا ہے۔ جائزہ میٹنگ میں اقلیتی امور کے سکریٹری سیلیش، سعودی عرب میں ہندوستان کے سفیر اوصاف سعید، حج کمیٹی آف انڈیا کے چیئرمین جناح نبی شیخ، حج کمیٹی کے سی ای او ایم اے خان، جدہ میں ہندوستان کے قونصل جنرل محمد نور رحمن شیخ کے علاوہ وزارت اقلیتی امور، وزارت خارجہ، وزارت شہری ہوا بازی اور وزارت صحت کے اعلیٰ عہدیداروں نے شرکت کی۔صحافیوں سے بات کرتے ہوئے مختارعباس نقوی نے کہا کہ پورٹل پر حج گروپ آرگنائزر (ایچ جی او) کے لئے درخواست دینے کا عمل یکم نومبر سے شروع ہوگا جو یکم دسمبر تک جاری رہے گا۔ حج کا عمل جلد شروع کرنے سے ہندوستان اور سعودی عرب میں حج کے انتظامات بہتر ہوں گے۔ نقوی نے کہا کہ پچھلے سال ملک بھر میں 21 امبارکیشن پوائنٹس تھے، حج 2020 کے لئے وجئے واڑہ (آندھرا پردیش) کونیا امبارکیشن پوائنٹس بنایا جائے گا۔ اس طرح حج 2020 کے لئے ملک بھرکے 22 امبارکیشن پوائنٹس سے تقریباً 2 لاکھ ہندوستانی مسلمان حج پر جائیں گے۔سعودی عرب میں امسال بھی ہندوستانی حجاج کے ساتھ ہوئی پریشانیوں کے ازالے سے متعلق حکومت کی تیاریوں کو لے کر پوچھے گئے سوال کے جواب میں مختارنقوی نے کہا کہ اتنے بڑے پروگرام میں چھوٹی موٹی شکایات ہوسکتی ہیں جنہیں دور کرنے کی کوشش کی جائے گی-(بقیہ عالمی خبرپر)

x

Check Also

مسجد میں چھپائے جاتے ہیں اسلحے، غدارِ وطن کو سکھائیں گے سبق: بی جے پی رکن اسمبلی

شہریت ترمیمی قانون (سی اے اے)، قومی شہریت رجسٹر (این آر سی) ...