بنیادی صفحہ / تازہ خبریں / فوڈ سیفٹی سند ملنے پر کرناٹک کی مچھلیاں گوا میں فروخت کی جاسکیں گی؛ دیش پانڈے

فوڈ سیفٹی سند ملنے پر کرناٹک کی مچھلیاں گوا میں فروخت کی جاسکیں گی؛ دیش پانڈے

Print Friendly, PDF & Email

مینگلور: 26 نومبر، 18 (بھٹکلیس نیوز بیورو) ضلعی انچارج وزیر آر وی دیش پانڈے نے مینگلور میں اخباری کانفرنس سے بات کرتے ہوئے کہا ہے کہ کرناٹک سے گوا جانے والی مچھلیوں کا معاملہ بہت جلد حل ہوگا۔

انہوں نے کہا کہ ’’اس سلسلہ میں ہم نے وہاں کے محکمہ صحت کے وزیر سے رابطہ کیا، جس کے بعد وہ ماہی گیروں سے فوڈ سیفٹی سند لینے کے بعد مچھلیوں کو فروخت کرنے کی اجازت دینے پر راضی ہوگئے ہیں‘‘۔

وزیر موصوف نے کہا کہ یہ فیصلہ عوام کی صحت کے پیش نظر بھی اچھا ہی ہے، اس میں کسی کا کچھ نقصان نہیں ہوگا۔ انہوں نے بتایا کہ ریاست کے ماہی گیر بھی اس سلسلہ میں رضامند ہوگئے ہیں اور جلد یہاں سے گوا کو مچھلیاں سپلائی کی جائیں گی۔

خیال رہے کہ  پڑوسی ریاست گوا کی حکومت نے بیرونی ریاستوں سے آنے والی مچھلیوں میں فارمولین نامی کیمیکل کی موجودگی پر سخت قدم اٹھاتے ہوئے مچھلیوں کی درآمد پر پابندی لگادی ہے۔اس سے خاص کر ساحلی کرناٹکا کے ماہی گیروں اور مچھلی کے تاجروں کو زبردست جھٹکا لگا ہے۔ کیونکہ ساحلی کرناٹک کے مختلف مقامات سے روزانہ ہر ٹرک میں 6سے7ٹن مچھلیوں کے ساتھ 15 تا20 ٹرک مچھلیاں گوا میں فروخت کی جاتی تھیں۔

x

Check Also

تصاویر: ویسٹرن رینج آئی جی پی کی بھٹکل آمد