بنیادی صفحہ / صوبائی / اتر کینرا کے ایم پی آننت کمار نے کیا پرگیہ سنگھ کا دفاع

اتر کینرا کے ایم پی آننت کمار نے کیا پرگیہ سنگھ کا دفاع

Print Friendly, PDF & Email

بھوپال سے بی جے پی امیدوار سادھوی پرگیہ کے بعد مودی حکومت کے وزیر اور اتر کینرا کے ایم پی اننت کمار ہیگڈے نے مہاتما گاندھی کی بے عزتی کرنے والا قدم اٹھایا ہے۔ انھوں نے کہا کہ گوڈسے پر دیے گئے بیان کے لیے پرگیہ کو معافی مانگنے کی ضرورت نہیں۔ ہیگڈے نے جمعہ کے روز ٹوئٹ کر کہا کہ ’’مجھے خوشی ہے کہ 7 دہائی بعد آج کی نسل ایک بدلے ہوئے نظریاتی ماحول میں بحث کرتی ہے اور تنقید کیے جانے کی اچھی گنجائش دیتی ہے۔ ناتھو رام گوڈسے کو بھی آخر کار اس بحث سے خوشی ہوئی ہوگی۔‘‘ ساتھ ہی ہیگڑے نے لکھا ’’اب وقت آ گیا ہے کہ ہم معافی مانگنے کے دور سے آگے بڑھیں۔ اگر ابھی نہیں تو… کب!‘‘

بتا دیں کہ سادھوی پرگیہ نے جمعرات کو کہا تھا کہ ناتھو رام گوڈسے حب الوطن تھے اور حب الوطن رہیں گے۔ پرگیہ سنگھ نے ایک ویڈیو ٹوئٹ کیا تھا جس میں وہ کہتی ہوئی نظر آ رہی تھیں کہ ’’ناتھو رام گوڈسے حب الوطن تھے اور ہمیشہ رہیں گے۔ ویسے لوگ جو انھیں دہشت گرد کہہ رہے ہیں انھیں خود کے اندر جھانک کر دیکھنا چاہیے۔ ایسے لوگوں کو الیکشن کے بعد جواب مل جائے گا۔‘‘

حالانکہ پرگیہ ٹھاکر کے بیان سے بی جے پی نے کنارہ کر لیا تھا۔ بی جے پی ترجمان جی وی ایل نرسمہا راؤ نے کہا تھا کہ ’’ان کے بیان سے بی جے پی متفق نہیں ہے اور اس کی تنقید کرتی ہے۔ پارٹی ان سے اس معاملے میں صفائی مانگے گی اور ان سے برسرعام اس بیان کے لیے معافی مانگنے کے لیے کہے گی۔‘‘

اس کے کچھ گھنٹوں بعد ہی سادھوی پرگیہ نے اپنے اس بیان کو واپس لیتے ہوئے اسے انفرادی بیان بتایا اور اس کے لیے معافی مانگی۔ انھوں نے کہا کہ وہ اس ایشو پر پارٹی لائن پر چلیں گی۔ ناتھو رام گوڈسے کو لے کر دیے بیان کے بعد پرگیہ کی ملک بھر میں تنقید ہوئی تھی۔ کانگریس لیڈر رندیپ سرجے والا نے کہا تھا کہ ’’مودی اور امت شاہ جی کی چہیتی بی جے پی لیڈر پرگیہ ٹھاکر نے ایک بار پھر مہاتما گاندھی کے قاتل ناتھو رام گوڈسے کو سچا حب الوطن بتا کر پورے ملک کی بے عزتی کی ہے۔ بی جے پی کے لیڈر بار بار مہاتما گاندھی کی سوچ، راستے اور نظریات پر حملے بول رہے ہیں۔ یہ ہندوستان کے گاندھی وادی اصولوں کی بے عزتی کرنے کی بی جے پی کی گھناؤنی سازش ہے۔ یہ ایک ایسا جرم ہے جسے ملک کبھی معاف نہیں کر سکتا۔‘‘

 

 

x

Check Also

فلور ٹیسٹ کے دوران تلخ کلامی، کمار سوامی بولے۔ اپوزیشن کو حکومت گرانے کی جلد بازی کیوں؟

کرناٹک اسمبلی میں کانگریس۔ جے ڈی ایس کی تحریک اعتماد پر بحث ...