بنیادی صفحہ / قومی / لاک ڈاؤن میں توسیع ضروری ہے، آل پارٹی میٹنگ میں وزیراعظم نریندرمودی کا بیان

لاک ڈاؤن میں توسیع ضروری ہے، آل پارٹی میٹنگ میں وزیراعظم نریندرمودی کا بیان

Print Friendly, PDF & Email

دہلی : وزیراعظم نریندرمودی نے آل پارٹی میٹنگ میں خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ملک میں 21دنوں کے لیے جاری لاک ڈاؤن میں توسیع ضروری ہے۔ یادرہے کہ وزیراعظم لاک ڈاؤن میں توسیع سے پہلے تمام ریاستوں اور سیاسی جماعتوں سے بات چیت  کرکے فیصلہ لینا چاہتے ہیں۔وزیراعظم نے اپنے خطاب میں فلورلیڈر کو بتایا کہ حکومت  کی جانب سے لاک ڈاؤن میں توسیع کے لیے مختلف امور کا جائزہ لیاجارہاہے۔ ذرائع نے نیوز18 کو بتایا کہ وزیراعظم نریندرمودی نے اپوزیشن جماعتوں کو بتایا کہ سب سے تبادلہ خیال کے بعد ہی ملک گیرلاک ڈاؤن میں توسیع کے متعلق کوئی فیصلہ کیاجائیگا۔پی ایم مودی نے میٹنگ میں خطاب کے دوران کہا کہ کورونا وائرس کی وباء کے خلاف جنگ بہت سخت ہونے والی ہے اور یہ جنگ ابھی ختم نہیں ہوگی ۔ ذرائع کے مطابق اس موقع پر اپوزیشن جماعتوں نے ریاستوں کے لیے فنڈس جاری کرنے کا مطالبہ کیاہے۔ جس ہر پی ایم مودی نے یقین دلایا کہ اس سلسلہ میں بھی جلدہی تمام امور کا جائزہ لیکر فیصلے کیے جائیں گے۔

کل وزیراعظم نے وزرائے اعلیٰ سے مشورے  طلب کیے تھے۔بتایاجارہا ہے کہ ہندوستان میں کورونا وائرس (Coronavirus) کے بڑھتے معاملوں کے درمیان ملک میں لاک ڈاون کی مدت بڑھائی جائےگی یا نہیں اس پر وزیراعظم نریندر مودی (Narendra Modi) ریاستوں کے وزرائے اعلیٰ اور مرکزکے زیر انتظام ریاستوں کے منتظمین اورلیفٹیننٹ گورنرسے تبادلہ خیال کےبعد فیصلہ لیں گے۔ موصولہ اطلاعات کےمطابق ہفتہ کو وزرائے اعلیٰ، منتظمین اورلیفٹیننٹ گورنرسے وزیر اعظم نریندر مودی ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعہ رابطہ قائم کریں گے۔

وہیں دوسری جانب اترپردیش حکومت نے کورونا وائرس کی وباء پر قابوپانے کے لیے ایک بڑا فیصلہ لیاہےاور اتر پردیش کے 15 اضلاع کو مکمل طور پر سیل کرنے کا اعلان کردیاہے۔ اس سلسلہ میں احکامات بھی جاری کیے گئے ہیں۔ جن کا بدھ کی رات 12 بجے کے بعد قابل اطلاق عمل میں آئیگا۔ بتایا جارہا ہے کہ اس عرصے کے دوران ، اضلاع میں کسی بھی گاڑی کو بغیر پاس کے داخلہ نہیں ملے گا۔ ان میں لکھنؤ ، آگرہ اور غازی آباد جیسے بڑے اضلاع شامل ہیں۔ اس کے ساتھ ہی یہ حکم بھی دیا گیا ہے کہ 30 اپریل تک کوئی ماسک پہنے بغیر گھروں سے باہر نہیں جا سکے گا۔ معلومات کے مطابق ان اضلاع کے ہاٹ سپاٹ علاقوں کو مکمل طور پر سیل کردیا جائے گا۔ 15 اپریل کے بعد ان اضلاع کی حالت کا ایک بار پھر جائزہ لیا جائے گا اور اس کے بعدہی آگے کی کارروائی پر مزید فیصلہ لیا جائے گا۔

واضح رہےکہ کووڈ-19 (Covid19) سے نمٹنےکےلئے تشکیل کئےگئے وزرا کےگروپ (جی او ایم) نے 15 مئی تک سبھی تعلیمی اداروں کو بند رکھنے اور لوگوں کے شرکت کرنے والے سبھی مذہبی سرگرمیوں پر روک لگانےکی سفارش کی ہے۔ وزرا کےگروپ کا کہنا ہےکہ حکومت چاہے21 دنوں کےلاک ڈاون (Lockdown In India) کو آگے بڑھائے یانہیں، لیکن تعلیمی اداروں اور مذہبی سرگرمیوں پر 15 مئی تک روک لگانی چاہئے۔ سرکاری ذرائع نے منگل کو یہ اطلاع دی۔

x

Check Also

مدھیہ پردیش ضمنی الیکشن: راہل گاندھی نے امرتی دیوی پر کمل ناتھ کے بیان کو بتایا بدبختانہ، بولے۔ مجھے ایسی زبان پسند نہیں

نئی دہلی۔ کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی (Rahul Gandhi) نے مدھیہ پردیش ...