بنیادی صفحہ / قومی / گجرات اسمبلی انتخابات کے لئے بی جے پی نے کمر کسی: ‘مشن 150’ کا ہدف مقرر

گجرات اسمبلی انتخابات کے لئے بی جے پی نے کمر کسی: ‘مشن 150’ کا ہدف مقرر

Print Friendly, PDF & Email

نئی دہلی۔(بھٹکلیس نیوز) بی جے پی نے قریب ڈیڑھ دہائی بعد نریندر مودی کے بغیر گجرات میں اسمبلی انتخابات کے لئے کمر کسی ہے اور پارٹی صدر امت شاہ نے گجرات کے لئے ‘مشن 150’ کا ہدف مقرر کیا ہے.گجرات کے دورے پر گئے پارٹی صدر امت شاہ نے کہا ہے کہ جب نریندر مودی گجرات کے وزیر اعلی تھے، تو ہم نے گجرات اسمبلی انتخابات میں 128 نشستیں جیتی تھی، اب وہ وزیر اعظم ہیں تو بی جے پی کو کم سے کم 150 نشستیں ضرور جیتنی چاہئے.بی جے پی کے سینئر قومی ترجمان سید شاہنواز حسین نے کہا، ” وزیر اعظم مودی کی ترقی کے منتر کے ساتھ ہم گجرات، ہماچل پردیش اور کرناٹک میں ریکارڈ جیت درج کریں گے. ہم گجرات کو بھاجپا یوکت اور ہماچل پردیش اور کرناٹک کو کانگریس مکت کریں گے. ” بی جے پی نے اپنی مہم کے مرکز میں ‘نوجوانوں’ اور ‘دلت سمیت معاشرے کے کمزور طبقوں’ کو با اختیار بنانے اور ‘ترقی’ کو رکھا ہے. بی جے پی صدر امت شاہ نے ہر ریاست کے لئے اب تک کی سب سے بڑی جیت کا ہدف رکھا ہے. اس دوران وزیر اعظم نریندر مودی بھی مختلف ریاستوں کے بی جے پی ممبران پارلیمنٹ سے ملاقات کر چکے ہیں. اڑیسہ میں بھی پارٹی کی ورکنگ کمیٹی کے اجلاس میں اس بارے میں غور و فکر ہوا اور ایک خاکہ تیار کیا گیا. پارٹی، حکومت کے عوامی بہبود کے منصوبوں اور کامیابیوں کو عوام تک پہنچانے پر زور دے رہی ہے.گجرات میں بی جے پی 19 سال سے اقتدار میں ہے اور طویل عرصے بعد پہلی بار نریندر مودی کے چہرے کے بغیر پارٹی انتخابات میں اترے گی. 182 رکنی گجرات اسمبلی کے لئے ہونے والے انتخابات میں بی جے پی نے ‘مشن 150’ کا مقصد بنایا ہے.حسین نے کہا کہ گجرات نے نریندر مودی کو کئی بار وزیر اعلی بنایا اور آج اسی گجرات کے مودی ملک کے وزیر اعظم ہیں. پورے ملک میں نریندر مودی کو مینڈیٹ ملا ہے. گجرات کا ترقی کا ماڈل لوگوں کے سامنے ہیں. ایسے میں یقینی طور پر بی جے پی گجرات میں جیت کا ریکارڈ بناییگی.

x

Check Also

بی جے پی اور آر ایس ایس جمہوریت کو تباہ کر رہے ہیں: اشوک گہلوت

ترواننت پورم: راجستھان کے وزیر اعلیٰ اور سینئر کانگریس لیڈر اشوک گہلوت ...