بنیادی صفحہ / تازہ خبریں / عوامی مسائل حل کرنے بھٹکل میں ضلعی ایس پی کی ہنگامی نشست

عوامی مسائل حل کرنے بھٹکل میں ضلعی ایس پی کی ہنگامی نشست

Print Friendly, PDF & Email

بھٹکل: 11 مئی،20 (بھٹکلیس نیوز بیورو) بھٹکل میں گزشتہ تین دنوں میں کورونا کے 28 معاملے آنے کے بعد کئی مقامات پر سیل ڈاؤن کیا گیا تھا جس سے عوام کو اناج، میڈٰیکل اور دیگر بنیادی سہولیات تک پہنچنے میں تکلیفیں آرہی تھیں اور اس کی شکایات ایس پی سے بھی کی گئیں تھیں۔

اسی کو دیکھتے ہوئے آج ضلعی ایس پی شیوپرکاش دیوراج بھٹکل آئے ہوئے تھے اس موقع پر انہوں نے ایک نشست بھی منعقد کی جس میں انہوں نے عوام کے مفاد کے لیے کئی ایک اقدامات کا اعلان کیا۔

ایس پی نے اس موقع پر کہا کہ اناج وغیرہ کی ڈیلیوری کے لیے اس سے قبل جن افراد کو پاس جاری کیے گئے ہیں وہ اگلے تین دنوں تک یعنی بدھ تک چلائے جاسکیں گے جبکہ بدھ یا جمعرات کے بعد اس کارڈ کی اہمیت نہیں ہوگی وہ ناکارہ ہوجائیں گے۔

انہوں نے کہا کہ بدھ یا جمعرات کے بعد بھٹکل میں مکمل لاک ڈاؤن ہوگا اور ضروری اشیاء بھی تعلقہ انتظامیہ کے ذریعے ہی گھروں تک پہنچائی جائیں گی۔

ایس پی نے ایمرجینسی کی صورت میں نوڈل افسر یا ہیلپ ڈیسک کو فون کرنے کی گزارش کی اور نہ ملنے پر اپنی ہی گاڑی سے باہر نکلنے کی گزارش کرتے ہوئے کہا کہ شہر میں چند مقامات پر چوکیاں بنائی گئیں ہیں وہاں ایمرجیسنی کے لیے عارضی پاس دیے جائیں گے جس کی مدت متعین ہوگی۔

ضلع ایس پی نے اس موقع پر عوام سے کہا کہ ان میں کورونا کی کوئی بھی علامت نظر آتی ہے تو وہ ڈرے بغیر تعلقہ اسپتال کا رخ کریں اور اپنی جانچ کروائیں ورنہ ایک کی وجہ سے کورونا پورے خاندان اور پھر پورے شہر میں پھیل سکتا ہے۔

موصوف نے اس موقع پر سوشیل میڈیا پر انتظامیہ کے خلاف پھیلائے جارہے پیغامات اور غلط خبروں پر ناراضگی ظاہر کی اور کہا کہ یہ سب چیزیں ہمارے علم میں ہیں اور جب یہ حد سے بڑھ جائیں گی تو ان پر ضرور کارروائی کی جائے گی۔ انہوں نے عوام سے گزارش کی کہ انتظامیہ پر بھروسہ رکھیں اور غلط پیغامات کے ذریعے انتشار پھیلانے سے بچیں۔

اس موقع پر بھٹکل ڈی وائی ایس پی گوتم تحصیلدار روی چندرا سمیت دیگر آفسران بھی موجود تھے۔

x

Check Also

ریاست میں کورونا کے مریضوں میں ریکارڈ اضافہ : 24 گھنٹوں میں 149 معاملات ۔ منڈیا میں ایک ہی دن میں 71 کورونا پوزیٹیو معاملات

بینگلورو: 19 مئی،20 (بھٹکلیس نیوز بیورو) ریاست میں لاک ڈاؤن میں کی ...