بنیادی صفحہ / تازہ خبریں / اب کرناٹک میں مالک مکان دو ماہ سے زیادہ کا کرایہ اڈوانس نہیں لے سکیں گے؟

اب کرناٹک میں مالک مکان دو ماہ سے زیادہ کا کرایہ اڈوانس نہیں لے سکیں گے؟

Print Friendly, PDF & Email

مرکز کا ماڈل کرایہ داری قانون ریاست میں بھی نافذ کرنے پر غور

بینگلورو: 9 جولائی 21 (سالار نیوز/بھٹکلیس نیوز بیورو) ریاستی وزیر برائے مال گذاری آر۔اشوک نے کل کہا کہ مرکز کے ماڈل ٹیننسی ا یکٹ کور یاست کرناٹک میں بھی اپنانے ریاستی حکومت غور کر رہی ہے ۔

مالک مکا ن اور کرایہ داروں کے درمیان پیدا ہونے والے تنازعات کو ختم کرنے مرکز کے ماڈل کوا پنانا سودمند ثابت ہوگا ۔ مرکزی کا بینہ نے نئے کرایہ داری قانون کومنظوری دے کر اس قانون کو تمام ریاستوں میں سر کیولریشن کرنے کے ایک ماہ بعد ریاستی حکومت نے بھی مرکز کے ماڈل کو اپنانے کا ارادہ ظاہر کیا ہے ۔

اشوک نے بتایا کہ ہم موجودہ ٹیننسی قانون کو آسان کر نا چاہتے ہیں ۔قبل از یں کرایہ مقر ر کر نے میں حکومت کا رول ہوا کرتا تھا۔اب ہم یہ تجویز پیش کر یں گے کہ دونوں فریقین مالک مکان اور کرایہ دار کی مرضی سے کرایہ مقرر ہو۔ دونوں کو قانونی طور پر کرایہ مقرر کر کے معاہدہ کرنے کے بعد اس معاہدہ کوگورنمنٹ کے پورٹل پر اپ لوڈ کر نا چا ہئے ۔

انہوں نے بتایا کہ اکثر ما لک مکان بالخصوص بنگلورو میں 5 تا10 مہینوں کا کرایہ اڈوانس کے طور پر جمع کرنے کرایہ دار سے کہا جا تا ہے۔اگر ریاست میں کرایہ داری قانون نافذ کر دیا گیا تو مالک مکان اپنے مکان کا دو مہینوں سے زیادہ کرایہ اڈوانس کے طور پرنہیں لے سکیں گے ۔

نئے قانون میں کرایہ کے معاہدہ کو زیادہ اہمیت حاصل ہے ۔ تنازعات حل کر نے رنٹ اتھارٹی قائم کی جاۓ گی۔ نئے قانون کے ساتھ مالک اور کرایہ دار کا رواج بھی تبدیل ہو جاۓ گا۔اگر کوئی تنازعہ پیدا ہوا تو متعلقہ حکام کو 60 دنوں میں تنازع حل کرنا ہے ۔

اشوک نے کہا کہ مالک اور کرایہ دار کے درمیان پیدا ہونے والے تنازعہ 60 دنوں میں حل کروانے کا ہم منصوبہ تیار کرر ہے ہیں ۔ اگر معاملہ کی شنوائی ملتوی ہوبھی گئی تو کسی بھی فریق کو تین سے زیادہ مواقع نہیں ملیں گے ۔انہوں نے بتایا کہ تنازعات کے ڈر سے اکثر مالکان اپنے مکانات کرایہ پر دیئے بغیر ہی خالی رکھے ہوئے ہیں۔ اس وقت واحد بنگلور میں دو سے تین لاکھ مکانات خالی پڑے ہیں ۔ ہمیں امید ہے کہ ایک بار یہ قانون نافذ ہو گیا تو مالکان مکان کو آسانی سے کرایہ دارمل جائیں گے اور کرا یہ بھی سستا ہو جاۓ گا ۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*

 
x

Check Also

غیر قانونی طور پر تعمیر شدہ تمام مذہبی مقامات کے تحفظ کے لئے اسمبلی میں منظور ہوا’کرناٹکا مذہبی مقامات تحفظ قانون’

بینگلورو: 22 ستمبر، 2021 (بھٹکلیس نیوز بیورو) ریاست کے عوامی مقامات پر ...