بنیادی صفحہ / تازہ خبریں / حکومت نے لگائی چینی ایپس پر پابندی: اگر آپ نے بھی انسٹال کیے ہیں یہ 59 ایپس تو جانئے اب کیا ہوگا؟

حکومت نے لگائی چینی ایپس پر پابندی: اگر آپ نے بھی انسٹال کیے ہیں یہ 59 ایپس تو جانئے اب کیا ہوگا؟

Print Friendly, PDF & Email

نیو دہلی : 29 جون،20 (ایجنسی) سرحد پر کشیدگی کے درمیان مرکزی حکومت نے 59 چینی ایپس پر پابندی عائد کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ جن ایپس پر حکومت نے پابندی عائد کی ہے ، اس میں شارٹ ویڈیو میکنگ ایپ ٹاک ٹاک سے لے کر یوسی براوزر ، شیئراٹ اور کیم اسکینر جیسے ایپس شامل ہیں ۔ ہندوستان میں بڑی سطح پر ان ایپس کا استعمال کیا جاتا ہے ۔ حکومت کے اس فیصلہ سے یہ تو واضح ہوگیا ہے کہ مشرقی لداخ میں بڑھتی کشیدگی کے درمیان چین کو حکومت نے ایک پیغام دیدیا ہے ۔

 

حکومت نے کیسے چینی ایپس پر لگائی پابندی؟

مرکزی حکومت نے انفارمیشن ٹیکنالوجی ایکٹ 2000 کے سیکشن 69 اے کے تحت ان 59 چینی ایپس پر پابندی لگائی ہے ۔ اس سیکشن میں بندوبست ہے کہ مرکزی حکومت یا مجاز افسر کو لگتا ہے کہ اس سے ملک کی کسی طرح کی سیکورٹی کو خطرہ ہے تو وہ پابندی عائد کرسکتا ہے ۔

انفارمیشن ٹیکنالوجی کے ایکسپرٹ بالینو شرما داگھیچ نے اس پابندی کو لے کر کہا کہ اگر حکومت نے شہریوں اور ملک کے تحفظ کو دیکھتے ہوئے یہ قدم اٹھایا ہے ، تو انہیں فوج اور حکومت کے فیصلہ کا خیر مقدم کرنا چاہئے ۔ ممکن ہے کہ حکومت سروس پرووائیڈرس کو اس بارے میں ہدایت جاری کرے کہ وہ ان ایپس کے استعمال پر روک لگائیں ۔

یوزرس کیلئے یہ ایپس کیسے بند ہوں گے ؟
حکومت کے ذریعہ ان ایپس پر پابندی عائد کرنے کیلئے جاری نوٹیفکیشن کے بعد سروس پرووائیڈرس کو اس سلسلہ میں ہدایت جاری کی جاسکتی ہے ۔ ایسے میں ممکن ہے کہ یوزرس کو ان ایپس پر اگلی مرتبہ ایکسس کرنے سے پہلے میسیج آئے کہ حکومت کی درخواست کے بعد اس ایپ پر پابندی عائد کردی گئی ہے ۔ حالانکہ اس بات کا امکان ہے کہ یہ میسیج انہیں ایپ کیلئے ہو جن کے استعمال کرنے کیلئے ایکٹیو انٹرنیٹ کی ضرورت پڑتی ہے ، لیکن ایپ اسٹور سے ان ایپ کو آگے اب ڈاون لوڈ نہیں کیا جاسکے گا ۔ حکومت کی ہدایت کی کاپی ملنے کے بعد گوگل پلے اسٹور اور ایپل ایپ اسٹور پر سے ان ایپس کو ہندوستانی یوزرس کیلئے ہٹا لیا جائے گا ۔

x

Check Also

اڈپی کے شیروا میں فیس بک کے ذریعے تین طلاق دینے پر ایک شخص کو کیا گیا گرفتار

اڈپی: 9 اگست،20 (بھٹکلیس نیوز بیورو) شیروا پولس نے فیس بک پر ...