بنیادی صفحہ / قومی / ریزرو بینک آف انڈیا میں چھ مہینے کے اندر دوسری وداعی ، اب ڈپٹی گورنر نے وقت سے پہلے دیا استعفی : رپورٹ

ریزرو بینک آف انڈیا میں چھ مہینے کے اندر دوسری وداعی ، اب ڈپٹی گورنر نے وقت سے پہلے دیا استعفی : رپورٹ

Print Friendly, PDF & Email

ریزرو بینک آف انڈیا کے سب سے کم عمر ڈپٹی گورنر ویرل آچاریہ نے اپنی مدت کار ختم ہونے سے چھ ماہ پہلے ہی استعفی دیدیا ہے ۔ آچاریہ 23 جنوری 2017 کو ڈپٹی گورنر کے عہدہ پر مقرر کئے گئے تھے ۔ ان کی یہ مدت کار تین سال کی تھی ، لیکن مدت کار ختم ہونے سے چھ ماہ پہلے ہی انہوں نے استعفی دیدیا ہے ۔ فروری 2020 میں انہیں سی وی اسٹار پروفیسر آف اکنامکس کے طور پر نیویارک نیورسٹی اسٹرن اسکول آف بزنس ( این وائی یو اسٹرن ) لوٹنا تھا ، لیکن آچاریہ اس سال اگست میں ہی جا رہے ہیں ۔

بزنس اسٹینڈرڈ کے ذرائع سے ملی خبر کے مطابق ریزرو بینک کی مدرا پالیسی کی جائزہ میٹنگ سے کچھ ہفتہ پہلے ہی آچاریہ استعفی دے چکے تھے ۔ جولائی ختم ہونے سے کچھ دن پہلے ہی آچاریہ عہدہ سے الگ ہوجائیں گے ۔ ڈپٹی گورنر نے استعفی دینے کے پیچھے ذاتی وجوہات کا تذکرہ کیا ہے ۔ حالانکہ زیادہ زور دینے پر انہوں نے کہا کہ اسکول میں میرے ایک ٹیچر نے کہا تھا کہ جب تہمارا کام خود بولے تو بیچ میں زیادہ دخل مت دو ۔

 آپ کو بتادیں کہ گزشتہ سال 10 دسمبر کو ارجت پٹیل نے آر بی آئی کے گورنر کے عہدہ سے استعفی دیدیا تھا ۔ اس کے بعد سے ہی بینکنگ سیکٹر میں سرگوشیاں تھیں کہ ویرل آچاریہ بھی استعفی سونپ سکتے ہیں ۔

x

Check Also

یوگی حکومت بابری مسجد سماعت ختم ہونے تک متعلقہ جج کو ریٹائر نہ کرے: عدالت عظمیٰ

بابری مسجد منہدم کرنے کی سازش معاملہ میں سپریم کورٹ نے اتر ...