بنیادی صفحہ / قومی / مودی حکومت کی مشکلات میں اضافہ، کسان تحریک کو ٹرانسپورٹرس کی حمایت حاصل

مودی حکومت کی مشکلات میں اضافہ، کسان تحریک کو ٹرانسپورٹرس کی حمایت حاصل

Print Friendly, PDF & Email

کسان تحریک آج ساتویں دن پورے آب و تاب کے ساتھ جاری ہے اور ہر گزرتے دن کے ساتھ یہ تحریک مضبوط ہوتی جا رہی ہے۔ روزانہ نئی تنظیمیں اور نئی شخصیتیں زرعی قوانین کے خلاف جاری کسان تحریک کو حمایت دے رہی ہیں جس سے کسانوں کا حوصلہ کافی بلند ہے۔ تازہ ترین خبروں کے مطابق آل انڈیا موٹر ٹرانسپورٹ کانگریس نے بھی کسانوں کی حمایت کا اعلان کر دیا ہے جو مودی حکومت کے لیے ایک زبردست جھٹکا ہے۔

آل انڈیا موٹر ٹرانسپورٹ کانگریس کا کہنا ہے کہ اگر مودی حکومت کسانوں کے مطالبات کو نہیں مانتی تو دہلی-این سی آر سمیت پورے ملک میں سامانوں کی آمد و رفت اور اس کی سپلائی روک دی جائے گی۔ اگر ٹرانسپورٹرس یہ قدم اٹھاتے ہیں تو مودی حکومت کے لیے مشکلات میں اضافہ لازمی ہے۔

 ٹرانسپورٹ کانگریس کی طرف سے کہا گیا ہے کہ کسانوں کی تحریک اور مظاہرہ کی وجہ سے نہ صرف پھل اور سبزی بلکہ اس کے ساتھ ہی دودھ اور دوا جیسی ضروری اشیاء بھی ایک جگہ سے دوسری جگہ نہیں جا پا رہی ہیں۔ ادارہ کا یہ بھی کہنا ہے کہ موٹر ٹرانسپورٹ کانگریس جلد ہی کسانوں کی حمایت میں کیا مناسب قدم اٹھائے جا سکتے ہیں، اس پر فیصلہ کرے گا اور یہ بھی ہو سکتا ہے کہ دہلی-این سی آر سمیت پورے شمالی ہند اور پھر ملک میں سامان کی آمد و رفت پر روک لگانے کا فیصلہ بھی لے لیا جائے گا۔ لہٰذا یہ ضروری ہے کہ مرکزی حکومت کسانوں کی باتوں کو سنجیدگی سے لیتے ہوئے اس ایشو کا حل جلد از جلد نکالنے کی کوشش کرے۔

ٹرانسپورٹ کانگریس نے کسانوں کی تحریک کی حمایت کرتے ہوئے کہا ہے کہ کسان ہمارا ’اَن داتا‘ ہے اور وہ ہندوستان کی معیشت کی ریڑھ کی ہڈی کی طرح ہیں۔ ایسے میں ان کے مطالبات کو نظرانداز کرنا مناسب نہیں ہے۔ ٹرانسپورٹ کانگریس کی طرف سے یہ بھی کہا گیا ہے کہ ہمارے ملک میں دیہی علاقے کی تقریباً 70 فیصد فیملی زراعت سے جڑی ہوئی ہیں، ایسے میں ان کسانوں کے مطالبات کو سنجیدگی سے لینا ضروری ہے۔ ساتھ ہی اس ادارہ کا کہنا ہے کہ کسانوں کی تحریک کی وجہ سے پورا شمالی ہندوستان متاثر ہے۔ اس کا اثر یہ ہو رہا ہے کہ جموں و کشمیر، ہماچل پردیش، پنجاب، راجستھان، اتراکھنڈ اور اتر پردیش جیسی ریاستوں سے جو کھانے پینے کی ضرورت کی چیزیں ہیں وہ ایک جگہ سے دوسری جگہ نہیں پہنچ پا رہی کیونکہ ملک کا ’اَن داتا‘ سڑکوں پر ہے۔

x

Check Also

اتر پردیش اسمبلی گیلری میں لگائی گئی ’ساورکر‘ کی تصویر، تنازعہ شروع

اتر پردیش میں کانگریس اور سماجوادی پارٹی نے قانون ساز اسمبلی کی ...