بنیادی صفحہ / قومی / خاتون پائلٹ پونم یادو نے بریلی ائیرپورٹ سے بھری پہلی پرواز

خاتون پائلٹ پونم یادو نے بریلی ائیرپورٹ سے بھری پہلی پرواز

Print Friendly, PDF & Email

بریلی: ہوائی سفر نیٹورک سے کسی بھی شہر کا جڑ جانا واقعی خوشی کی بات ہے۔ اس لحاظ سے بین الاقوامی یوم خواتین پر بریلی ائیرپورٹ کی شروعات بھی یادگار بن گئی۔ ایلائنس ائیر کے 72 سیٹر طیارہ پربریلی سے دہلی کے لیے پہلی پرواز بھرنے والی پائلٹ پونم یادو سے لے کر انجینئر، سیکورٹی اہلکار اور سبھی کرو ممبران خواتین تھیں۔ دہلی سے آنے والی فلائٹ صبح تقریباً 10.30 بجے بریلی ائیر پورٹ پہنچی۔ بریلی سے اسی طیارہ نے دوپہر 12.18 بجے دہلی کے لیے پرواز بھری۔ اب ہفتہ میں چار دن بریلی-دہلی-بریلی پروازیں ملیں گی۔ اپریل کے آخر تک اور مئی کی شروعات میں بالترتیب ممبئی اور بنگلورو کی پروازیں بھی شروع ہونے کی امید ہے۔ اس کے بعد لکھنؤ اور پریاگ راج کی فلائٹس کا نمبر آئے گا۔

مایاوتی نے اتر پردیش کی وزیر اعلیٰ رہتے ہوئے 23 اگست 1997 کو بریلی میں گوتم بدھ ائیر پورٹ ٹرمینل کی سنگ بنیاد ائیر فورس کے ترشول ائیربیس کے پاس رکھی تھی۔ ائیرپورٹ کے لیے 14 ہیکٹیر زمین حاصل نہ ہو پانے کے سبب تعمیراتی کام میں تاخیر ہو رہی تھی۔ پھر سماجوادی پارٹی حکومت کے دور میں زمین کا حصول ہوا۔ لوک سبھا انتخاب 2019 کے دوران بریلی میں مثالی ضابطہ اخلاق نافذ ہونے سے چند گھنٹے پہلے 10 مارچ 2019 کو بریلی ائیرپورٹ ٹرمینل کی بلڈنگ کا افتتاح ہوا۔ تب بی جے پی لیڈروں کا ہجوم افتتاحی تقریب میں امنڈ پڑا تھا۔

  • خاتون پائلٹ پونم یادو نے بریلی ائیرپورٹ سے بھری پہلی پرواز

 اس وقت کے مرکزی وزیر برائے شہری ہوابازی سریش پربھو نے ممبئی سے ٹیلی کانفرنسنگ کے ذریعہ افتتاح کیا تھا۔ بریلی سے رکن پارلیمنٹ اور مرکزی وزیر سنتوش گنگوار اور اتر پردیش کے وزیر برائے ہوابازی نند گوپال نندی بھی موجود رہے تھے۔ تب عوام سے وعدہ کیا گیا تھا کہ تقریباً ایک مہینے بعد 15 اپریل 2019 سے پرواز شروع ہو جائیں گی۔ یہاں تک بتا دیا گیا تھا کہ جیٹ ائیرویز کی جانب سے تجویز بھی سامنے آ چکی ہے۔ بہر حال، تب سے لے کر اب تک کبھی ہوابازی کمپنیوں کے آگے نہ آنے سے اور کبھی بجلی گھر نہ بننے جیسی خامیوں نے پہلی فلائٹ میں اتنی تاخیر کر دی۔

تکنیکی طور پر دیکھا جائے تو یہ اس روٹ کی دوسری فلائٹ ہے۔ دراصل ایلائنس ائیر کے طیارہ نے صبح تقریباً 10 بجے دہلی سے بریلی ائیر پورٹ کے لیے پرواز بھری۔ اس پہلی فلائٹ میں بریلی سے بی جے پی رکن پارلیمنٹ اور مرکزی وزیر سنتوش گنگوار اور آنولہ سے رکن پارلیمنٹ دھرمیندر کشیپ سمیت کئی بی جے پی اراکین اسمبلی موجود تھے۔ ایلائنس ائیر کی تاریخ میں یہ پہلی آل ویمن کرو فلائٹ رہی، یعنی پائلٹ سمیت پورے کرو میں صرف خواتین ہی تھیں۔ یہ فلائٹ تقریباً 10.30 بجے بریلی پہنچی۔

بریلی ائیرپورٹ پر فلائٹ لینڈ ہوتے ہی واٹر کینن سیلیوٹ دیا گیا۔ ہوائی پٹی کی دونوں جانب سے فائر بریگیڈ کی گاڑیوں نے کچھ اس طرح پانی کی بوچھار کی جس سے ایک آرچ جیسا بن گیا۔ پانی کے اس خوبصورت ورچوئل گیٹ سے فلائٹ کا استقبال دیکھنے کو لے کر ائیرپورٹ پر موجود لوگ کافی پرجوش نظر آئے۔ بریلی میں ریاست کے وزیر برائے شہری ہوابازی نند گوپال نندی نے دہلی سے آنے والوں کا استقبال کیا۔ اس موقع پر ائیرپورٹ کو خوب سجایا گیا۔ دیواروں پر فریم میں زری-زردوزی کی ساڑیاں فریم کر کے لگائی گئی ہیں۔ اس کے علاوہ ’جھمکا گرا رے…‘ گانے سے مشہور ہوئے جھمکے کی کئی تصویریں بھی فریمز میں لگی ہیں۔

بریلی ائیرپورٹ اتر پردیش کا آٹھواں شہری ہوائی اڈہ بن گیا ہے۔ اب تک لکھنؤ، وارانسی، گورکھپور، کانپور، ہنڈن، آگرہ اور پریاگ راج میں ہی سول ائیر پورٹ تھے۔ بریلی میں سول انکلیو کی تعمیر پر 83 کروڑ روپے خرچ ہوئے ہیں۔ اس کے علاوہ ائیرپورٹ اتھارٹی آف انڈیا کو مفت میں دستیاب کرائی گئی 35 ایکڑ زمین اور بجلی مہیا کرانے کے لیے 9.8 کروڑ روپے کا خرچ ہوا ہے۔ چونکہ بریلی ائیرپورٹ کو علاقائی رابطہ منصوبہ ’پرواز‘ کے تحت شروع کیا گیا ہے، اس لیے نظام کو بہتر بنانے کے لیے ریاستی حکومت کی جانب سے کئی طرح کی چھوٹ دی جائے گی، یعنی 50 فیصد سے کم مسافر ہونے پر اخراجات کے فرق کا بوجھ دیا جائے گا۔ چار ہزار یونٹ تک بجلی مفت دی جائے گی، 10 سال تک ایوی ایشن ٹربائن فیوئل (تیل) پر ویٹ نہیں لیا جائے گا اور سیکورٹی و فائر بریگیڈ خدمات مفت دی جائیں گی۔

x

Check Also

مہاکمبھ یا موت کا میلہ: گنگا کے بہتے پانی سے کورونا انفیکشن پھیلاؤ کا خطرہ زیادہ!

اتراکھنڈ کے وزیر اعلیٰ تیرتھ سنگھ راوت نے اپنے ایک بیان میں ...