دبئی روڈ ٹرانسپورٹ اتھارٹی کے اعلان کے مطابق یو اے ای کے سیاحتی اور کاروباری مرکز دبئی میں چلنے والی میڑو ٹرین اور ٹرام سروس اتوار کے روز سے تااطلاع ثانی بند رہے گی۔

گرین اور ریڈ لائن پر دبئی میٹرو کے تمام سٹیشنز بند رہیں گے۔

ادھر دبئی آر ٹی اے نے اعلان کیا ہے کہ دو ہفتوں کے اسٹرلائیزیشن پروگرام کے دوران جن افراد کو گھروں سے نکلنے کی خصوصی اجازت ہے، وہ شہر میں ایک جگہ سے دوسری جگہ جانے کے لئے بس سروس بغیر کی فیس کے ادا کر سکیں گے۔ اس مقصد کے لئے ’’نول‘‘ کارڈ چارج نہیں کیا جائے گا۔

نیز آر ٹی اے نے یہ بھی اعلان کیا ہے کہ دبئی ٹیکسی اور اس کے زیر انتظام چلنے والی فرنیچائرڈ ٹیکسی گاڑیاں مجاز مسافروں کو پچاس فیصد رعایت دیں گی۔

دبئی میٹرو کی دیکھ بھال اور آپریشنز کے نگران ادارے ’’سرکو‘‘ نے ایک سرکلر جاری کیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ شہر میں پرچون سٹور چلانے والے اسٹرلائیزیشن مدت کے دوران اپنی دکانیں نہیں کھولیں گے۔

دبئی لاک ڈاؤن

دوسری جانب متحدہ عرب امارات نے ملک گیرصفائی پروگرام کو مزید توسیع دینے کا فیصلہ کیا ہے۔ یو اے ای کی وزارت داخلہ اور وزارت صحت نے ایک مشترکہ بیان میں اس کی تصدیق کی ہے۔

یو اے ای کی سرکاری خبررساں ایجنسی وام کے مطابق دونوں وزارتوں نے کہا ہے کہ اب صفائی پروگرام میں ملک میں شامل تمام امارتوں کے مزید اداروں اور تنصیبات کو شامل کیا جائے گا۔ اس پروگرام کا عالمی ادارہ صحت ( ڈبلیو ایچ او) کی منظور شدہ سفارشات کی روشنی میں جائزہ لیا جائے گا۔‘‘

یو اے ای کی حکومت نے کرونا وائرس کو پھیلنے سے روکنے کے لیے 26 مارچ کو صفائی کی قومی مہم شروع کی تھی، گذشتہ اس میں پانچ اپریل تک توسیع کی گئی تھی اور یہ اتوار کو ختم ہونے والی تھی۔اب اس میں مزید ایک ہفتے کی توسیع کردی گئی ہے۔

اس صفائی پروگرام کے دوران میں رات آٹھ بجے سے صبح چھے بجے تک کرفیونافذ ہوتا ہے اور لوگوں کو اپنے گھروں ہی میں رہنے کی ہدایت کی جاتی ہے۔ اس مہم کے تحت سرکاری تنصیبات،عمارتوں، بس اسٹیشنوں اور ٹراموں کو مصفا کیا جارہا ہے۔

وام نے دونوں وزارتوں کے بیان کے حوالے سے کہا ہے کہ ’’صفائی پروگرام میں توسیع کا فیصلہ اس کے کامیاب نفاذ کی روشنی میں کیا گیا ہے۔اس کو جدید ٹیکنالوجی کے ذریعے اور متعدد مجازاداروں کی بروئے کار لایا جا رہا ہے۔اس میں وفاقی اور مقامی حکومتوں کے سیکڑوں کارکنان ، نگران اور منتظمین حصہ لے رہے ہیں۔‘‘

دبئی میڈیا آفس نے ٹویٹر پر صفائی پروگرام کی ویڈیوز بھی پوسٹ کی ہیں۔ان میں میٹرو، ٹیکسیوں، بسوں اور ٹراموں کو جراثیم کش سپرے سے مصفا کیا جا رہا ہے۔

دبئی پولیس نے بڑی شاہراہوں پر راڈاروں کی تصاویر اور ویڈیوز شئیر کی ہیں۔ ان کی مدد سے کرفیو کی خلاف کرنے والے ڈرائیوروں کو پکڑا جارہا ہے اور ان پر بھاری جرمانے عاید کیے جا رہے ہیں۔

درایں اثنا وزارت صحت کی ترجمان ڈاکٹر فریدہ الحسینی نے بتایا کہ متحدہ عرب امارات میں کرونا کا شکار ہونے والا ایک اور شخص جاں بحق ہو گیا، جس کے بعد مہلک وائرس کا نشانہ بننے والوں کی تعداد دس ہو گئی ہے۔