بنیادی صفحہ / بھٹکل و اطراف / ریاض جماعت بھٹکل مسلم ایسوسی ایشن کی جانب سے محفل بھٹکل کا خوبصورت انعقاد

ریاض جماعت بھٹکل مسلم ایسوسی ایشن کی جانب سے محفل بھٹکل کا خوبصورت انعقاد

Print Friendly, PDF & Email

ریاض : 18 جون 22 (حبیب اللہ محتشم ) ریاض جماعت بھٹکل مسلم ایسو سی ایشن  کی جانب سے 16 جون کی شام کراون  پلازہ میں محفل بھٹکل کا خوبصورت پروگرام منعقد ہوا جس میں بچوں کے ثقافتی پروگراموں کے ساتھ ساتھ کئی ایک دوسرے پروگرام بھی رکھے گئے ۔

اس موقع پر بھٹکل سے تشریف فرما مولوی عبدالنور فکردےندوی نے خطاب کرتے ہوئے سب سے پہلے جماعت کو مبارک باد دی اور بیرون ملک میں اتنی تعداد میں ایک جگہ جمع ہونا دیکھ کر خوشی کا بھی اظہار کیا۔ مولانا نے اس موقع پر حاضرین کو نصیحت کرتے ہوئے دجال کے فتنے سے بچنے کی تاکید کی اور تفصیل سے دجال کے فتنہ کا تذکرہ کرتے ہوئے کہا کہ اس دورمیں بے حیائی عام ہوگی، مادی چیزوں کی محبت بڑھے گی ۔

مولانا نے حلال کمائی پر زوردیتے ہوئے کہاکہ اگر آپ بیوی کے منہ میں حلال کا ایک لقمہ  بھی ڈالیں گے تو اس پربھی آپ کونیکی ملے گی ۔ سخاوت و فیاضی اوراللہ کی راہ میں اپنا مال خرچ کرنے  کی طرف توجہ دلاتے ہوئے انہوں نے حضرت عثمان غنی رضی اللہ تعالی عنہ کا قول پیش کیا کہ ہم وہ قوم ہیں کہ جواپنی کمائی عیاشی کے لئے نہیں بلکہ غریبوں کی مدد کے لئے استعمال کرتے ہیں ۔

مولانا نے اس موقع پر اولاد کی صحیح نہج پرتربیت کرنے پر زوردیتے ہوئے کہا کہ ہمیں اپنے بچوں کی تربیت میں ذرا برابر بھی کوتاہی نہیں کرنی چاہئے ، انکے شب وروز کی سرگرمیوں پر نظر رکھنی چاہئے کہ وہ دن بھر کن مشغولیات میں رہتے ہیں ، کہاں جا رہے ہیں ، کس سے مل رہے ہیں ،ساتھ ہی اولاد کوبھی نصیحت کی کہ وہ  ماں باپ کی خدمت کریں اورا نکے فرماں بردار بن کر زندگی گزاریں ۔

مہمان خصوصی سکریٹری جنرل بی ایم کے سی جناب منیری عتیق الرحمن صاحب نے اپنے خطاب میں کہا  کہ اگر ہم کو جنت کی کنجی حاصل کرنا ہو تو تین باتوں کا خیال رکھنا ضروری سب سے پہلے اللہ کی عبادت  دوسرا ہمارے سب کے  پیارے نبی صلی اللہ علیہ وسلم کی مکمل اطاعت اور تیسرا  خدمت خلق انہوں نے بات آگے بڑھاتے ہوئے کہاکہ ہمیں اسلاف کے قائم کیے ہوئے مرکزی اداروں کو مستحکم بنانے اور مزید تقویت دینے کی کوشش کرنی چاہئے۔

زکوٰۃ کو ادا کرنے کے بارے میں انہوں  نے کہا کہ اگر ہماری قوم کی زکوٰۃ  صحیح  طریقے پر لوگوں تک پہونچ جائے تو ہمارے گاؤں میں کوئی بھوکا نہیں رہے گا۔

رابطہ تعلیمی ایوارڈ سے متعلق تفصیلات فراہم کرتے ہوئے انہوں نے بتایا کہ انشاء اللہ جولائی میں تعلیمی ایوارڈ ہوگا اور سب کو پروگرام میں شریک ہونے کی دعوت دی۔ ممبران کو نصیحت کرتے ہوئے کہا ہم  جماعتوں سے مل جل کر اسلاف کے کام کو اگے بڑھائیں۔ انہوں نے اللہ کے راستے میں خرچ کرنے کی ترغیب دی ۔

جناب یونس قاضیا صاحب صدر کینرا مسلم خلیج کونسل نے  اپنے خطاب میں کہا کہ ایک جلسہ میں اتنی بڑی تعداد میں ہم وطنوں کا ایک ساتھ جمع ہونا اس بات کی دلیل ہے کہ ہماری قوم آپس میں کتنی محبت کے ساتھ زندگی گزار رہی ہے ۔

حالات کا تذکرہ ہوتے ہوئے کہا ایسے دور میں اگر ہم اپس میں ایک دوسرے کی خطاؤں پر معافی تلافی کی عادت نہیں ڈالیں گے اور حالات سے سبق نہیں لیں گے تو ہمیں کوئی بچا نہیں سکتا۔

صدرارتی خطاب میں جناب عمار قاضیا نے کہا کہ ہم وہ قوم ہیں جو اجتماعی زندگی کو ترجیح دیتے ہیں اور کسی نہ کسی بہانے سے معلوماتی پروگرام منعقد ہوتے رہتے ہیں اور ہمیں ایک دوسرے سے ملاقات کا بھی موقع میسر آتا ہے۔

اس موقع پر ماہر قاسمجی نے ریفل ڈراء میں 400 سعودی ریال جیتے جبکہ کوئز مقابلے میں اول مقام حاصل کرنے پر انہیں 300 سعودی ریال کا انعام دیا گیا ۔

Mahir Qasimji

واضح رہے کہ جلسے کی نظامت جناب حبیب اللہ محتشم نے کی۔ پروگرام میں کلمات تشکرجماعت کے جنرل سکریٹری جناب ذھیب پیشمام نے ادا کیے۔

پروگرام میں بی ایم اے کے ممبران کے ساتھ ساتھ جدہ اور دمام کے عہدیدار اور ذمہ دار شریک تھے ہر ایک نے پروگرام سے لطف اٹھایا۔ پروگرام میں ممبران کے لئے  کافی تعداد میں انعامات بھی تھے۔ جو ریفل ڈرا کے ذریعہ تقسیم کیے گیے۔

اسٹیج پر بی ایم کے سی کے سکریٹری جنرل جناب عتیق الرحمن منیری صاحب، کینرا مسلم خلیج کونسل کے صدر جناب یونس قاضیا صاحب ، مرکزی جماعت المسلمین کے نائب قاضی مولانا عبدالنور فکردے ندوی صدر جماعت جناب عمار قاضیا اور پروگرام کے روح رواں جناب نجف کھومی وغیرہ موجود تھے۔

پروگرام کا آغازحافظ عبدالجامع بنٹوال کی پر کشش آواز میں تلاوت کلام پاک مع ترجمہ سے ہوا، بھٹکل سے  تشریف فرما مولوی زفیف شینگیری نے نائطی نظمیں پڑھکر سامعین  کو  خوب محظوظ کیا۔

اس  پروگرام میں چھوٹے چھوٹے بچوں کا فینسی ڈریس، اور ریا کار درویش ڈرامہ پیش کیا گیا جبکہ نائطی زبان میں بچوں نے نظمیں پڑھی اور حاضرین کے لئے کوئز پروگرام بھی رکھا گیا جس میں حاضرین نے دلجمعی سے حصہ لیتے ہوئے کوئز کے جوابات دیے ۔

 

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*