بنیادی صفحہ / بھٹکل و اطراف / بھٹکل میں شہر کو ریلوے اسٹیشن سے جوڑنے والی سڑک کے درمیان شاہراہ پر انڈر پاس تعمیر کرنے کا مطالبہ

بھٹکل میں شہر کو ریلوے اسٹیشن سے جوڑنے والی سڑک کے درمیان شاہراہ پر انڈر پاس تعمیر کرنے کا مطالبہ

Print Friendly, PDF & Email

بھٹکل: 21 نومبر، 20 (بھٹکلیس نیوز بیورو) بھٹکل میں گذشتہ چند دنوں سے قومی شاہراہ کے تعمیراتی کام میں تیزی دکھائی دے رہی ہے اور بھٹکل تعلقہ کے دونوں جانب کام شروع بھی کیا جاچکا ہے جبکہ شہر میں تحویل اراضی کا کام بھی تقریبا پایہ تکمیل کو پہنچ رہا ہے۔

اس دوران  بھٹکل میں شاہراہ کی تعمیر کے بعد شہر کو ریلوے اسٹیشن سے جوڑنے والی قدوائی روڈ سے عثمان نگر اور گلمی کی سڑک پر جانے میں دشواری پیش آنے کے قوی امکانات کے پیش نظر مقامی عوام کی طرف سے ان سڑکوں کے درمیان شاہراہ پر انڈر پاس تعمیر کرنے کا مطالبہ کیا جارہا ہے اور اس سلسلہ میں ہائی وے اتھاریٹی اور تعلقہ انتطامیہ سے بھی باتیں کی جارہی ہیں۔

اس سلسلہ میں آج ایک اخباری کانفرنس  بھی منعقد ہوئی جس میں انڈر پاس کے لیے کی جارہی کوششوں کا تذکرہ کرتے ہوئے کہا گیا کہ اگر یہاں انڈر پاس تعمیر نہیں کیا گیا تو عوام کو شاہراہ پار کرنے کے لیے بڑا چکر لگانا پڑے گا۔ عوام کا کہنا تھا کہ عثمان نگر اور گلمی وغیرہ کے لوگوں کو مارکیٹ، میونسپال، اسکول یا کہیں بھی جانا ہوتا ہے اور شہر کے لوگوں کو ریلوے اسٹیشن بھی جانے کی ضرورت پڑتی ہے۔ ایسے میں یہاں انڈر پاس نہ بننے کی صورت میں شاہراہ سے گزرنا خطرے کی بات ہوسکتی ہے۔ اس لیے اگر شہر کو جوڑنے والی ان دو سڑکوں کے درمیان انڈر پاس کی تعمیر کی جاتی ہے تو عوام کا ایک بڑا مسئلہ حل ہونے کی امید ہے۔

اس موقع پر موجود لوگوں نے اس مطالبہ کو نہ ماننے پر بڑے پیمانہ پر احتجاج کی بھی بات کہی ہے اور عوامی اداروں سے تعاون کی بھی اپیل کی ہے۔

 

x

Check Also

نمّا ناڈو اوکٹہ  کے زیر اہتمام سرکاری ملازمتوں میں مسلمانوں کی بھرتی کے لیے کی جارہی کوششیں قابل تقلید ہیں: عنایت اللہ شابندری

گنگولی: 29 نومبر،20 (بھٹکلیس نیوز بیورو/راست)’’سرکاری نوکریوں میں اس وقت مسلمانوں کی ...