بنیادی صفحہ / بھٹکل و اطراف / کمٹہ ندی میں لگے غیر قانونی پمپ سیٹ ہٹانے کے بعد عوام کا احتجاج

کمٹہ ندی میں لگے غیر قانونی پمپ سیٹ ہٹانے کے بعد عوام کا احتجاج

Print Friendly, PDF & Email

کمٹہ: 15 مئی، 19 (بھٹکلیس نیوز بیورو) کمٹہ  کی اگنا شینی ندی پر عوام کی جانب سے غیر قانونی طور پر لگے پمپ سیٹ کو ہٹانے کے بعد عوام نے میونسپل افسران کے خلاف احتجاج کیا ہے اور اس کارروائی کی شدید مخالفت کی ہے۔

یہاں پانی کی قلت کے سبب گزشتہ کئی دنوں سے ڈپٹی کمشنر نے سنتے گولی پنچایت میں واقع ماراکل کے اطراف میں  روزانہ تین گھنٹوں کے لیے تھری فیس بجلی فراہم کرنے کی ہدایت دی تھی ۔تاہم اس کے بعد میونسپال افسران نے ندی سے غیر قانونی طور پر پانی نکالے جانے کو دیکھ کر عوام کے پمپ سیٹ نکال لیے جس پر وہاں کے عوام نے پر زور احتجاج کیا ۔جس کے نتیجہ میں میونسپال چیف کو پولس کی زائد فورس منگوانی پڑی۔

عوام کا الزام تھا کہ پمپ سیٹ کو اس انداز سے نکالا گیا ہے کہ وہ اب ناکارہ ہوگیا ہے اور  اس کی دوبارہ مرمت کے لیے پانچ ہزار کا خرچ آرہا ہے۔ تاہم چیف افسر کا کہنا تھا کہ پمپ سیٹ کو اسی وقت لوٹایا جائے گا جب عوام تحریری طور پر برسات تک پانی نہ نکالنے کا وعدہ کریں۔

اس واقعے کے بعد اسسٹنٹ کمشنر کے دفتر میں ایم ایل اے دینکر شیٹی کی قیادت میں ایک میٹنگ منعقد کی گئی جس میں ایم ایل اے نے میونسپالٹی کے اس اقدام کی مذمت کی اور کہا کہ افسران کو اس تعلق سے نرمی اختیار کرنی چاہئے تھی۔

اسسٹنٹ کمشنر پریتی گہلوت  نے عوام سے درخواست کی ہے کہ وہ آئندہ کچھ دنوں کے لیے انتظامیہ سے تعاون کریں اور غیر قانونی طور پر پانی کو نہ نکالیں۔

x

Check Also

عبدالحسیب کاڈلی صاحب مرکز النوائط کے صدر منتخب؛ محب اللہ سدی احمدا صاحب کو جنرل سکریٹری بنایا گیا

ابوظبہی: 18 مئی، 19 (بھٹکلیس نیوز بیورو) مرکز النوائط ابوظبی کے انتخابات ...