بنیادی صفحہ / عبدالمتین منیری

مصنف کی تحاریر : عبدالمتین منیری

نقوش پا کی تلاش میں ۔ گجرات کا ایک مختصر سفر(۹) ۔ ۔۔ اے اہل ادب آؤ یہ جاگیر سنبھالو۔۔۔ از: عبد المتین منیری۔ بھٹکل

پروفیسر بمبئی والا صاحب نے   بتایا کہ  ان کا واحد  مقصد   یہ ہے کہ  لائبریری کو کسی طرح آگے بڑھایا جائے،علمی ورثہ جس قدر اور جہاں سے بھی مل جائے اسے جمع کیا جائے، جستجو کبھی  ختم نہیں ہوتی، جو ...

مزید پڑھیں »

نقوش پا کی تلاش میں ۔ گجرات کا ایک مختصر سفر(۸) ۔ ۔۔ اے اہل ادب آؤ یہ جاگیر سنبھالو

 سورت کے بعد ہماری  اگلی منزل احمد آباد تھی،سیدھے چلتے تو راستہ پانچ گھنٹے کا تھا ، لیکن راستے میں کھروڈ اور بھروچ آگیا، اور دونوں جگہوں میں اتنی دلچسپیوں کے سامان  پیدا ہوگئے  کہ ان کے لئے وقت دینے ...

مزید پڑھیں »

بات سے بات: مکتبہ جبریل ، کینڈل، اور ای بوک۔۔۔ تحریر:عبد المتین منیری۔ بھٹکل

ہمارے پرجوش رفیق مولوی بشارت نواز نے مکتبہ جبریل اور اس سے وابستہ ای بک ریڈر جیسے پروجکٹ کے بند ہونے پر اظہار افسوس کیا ہے۔ اس سلسلے میں ہمارے ذہن میں چند خیالات آئے ہیں، انہیں تنقید پر محمول ...

مزید پڑھیں »

بات سے بات: مقامات حریری کا اسلوب۔۔۔ از: عبد المتین منیری۔ بھٹکل

 ادب کے ایک طالب علم کو دانشوروں، ادیبوں، اور صحافیوں کے درمیان ہونے والے علمی وادبی معرکوں کا مطالعہ کرتے رہنا چاہئے،اس ناچیز کو بھی ہمیشہ ایسے مواد سے دلچسپی رہی ہے، مقامات حریری کے اسلوب کے متروک ہونے کی ...

مزید پڑھیں »

نقوش پا کی تلاش میں۔۔۔ گجرات کا ایک مختصر سفر (۰۷)۔کھرود اور بھڑوچ ۔۔ عبد المتین منیری

جمعرات کی صبح ہمارا قافلہ سورت سے روانہ ہوا، ہماری اگلی منزل  جامعہ قاسمیہ کھروڈ تھی،  یہاں کے اکابر مولانا محمد اسماعیل کاپودروی، مولانا محمد ایوب پانولوی مہتمم جامعہ اور مفتی محمد زبیر صاحب وغیرہ سے ملاقاتیں ہوئیں، انہی بزرگوں ...

مزید پڑھیں »

نقش پا کی تلاش میں۔۔۔ گجرات کا ایک مختصر سفر(۶)۔۔ سورت۔۔۔ عبد المتین منیری۔ بھٹکل

WA: 00971555636151 سورت میں ہماری نگاہیں شیخ محمد طلحہ بلال  منیار کو تلاش کررہی تھیں، ویسے آپ سے ہماری ابھی تک بالمشافہ ملاقات نہیں  ہوئی ، لیکن علم وکتاب گروپ کے ذریعہ جب سے شناسائی ہوئی ہے، ایسا لگتا ہے ...

مزید پڑھیں »

نقوش پا کی تلاش میں۔۔۔ گجرات کا ایک مختصر سفر(۰۵) راندیر کی طرف۔۔۔ عبد المتین منیری۔ بھٹکل

*سملک سے ہماری اگلی منزل سورت تھی۔ سورت کے بیچوں بیچ سے دریائے تاپتی بہتا ہے، جو اسے راندیر اور سورت میں تقسیم کرتا ہے۔ ان دونوں شہروں کی اپنی اپنی  تہذیبی اور ثقافتی شناخت ہے۔ یہ دونوں قدیم شہر ...

مزید پڑھیں »

نقوش پا کی تلاش میں۔۔۔ گجرات کا مختصر سفر(۰۴)۔۔۔عبد المتین منیری

 پہلے روز جب ہم حضرت مولانامفتی احمد خانپوری دامت برکاتھم شیخ الحدیث جامعہ اسلامیہ تعلیم الدین دابھیل کی خدمت میں حاضر ہوئے تھے تو وہاں پر مولانا قاری عبد اللہ میاں صاحب سے بھی شرف ملاقات حاصل ہوا تھا، مولانا ...

مزید پڑھیں »

نقوش پا کی تلاش میں۔۔ گجرات کا مختصر سفر(۰۳)۔دابھیل۔۔۔ عبد المتین منیری۔ بھٹکل

 اب ہماری اولین منزل سورت کے قصبے دابھیل میں قائم تاریخی تعلیمی وتربیت گاہ جامعہ اسلامیہ تعلیم الدین اور یہاں کے اکابرسے شرف زیارت تھی۔ دابھیل ایک دور افتادہ قصبہ جس کی آج سے سو سال قبل ایسی کوئی اہمیت ...

مزید پڑھیں »

نقوش پا کی تلاش میں۔ گجرات کا ایک مختصر سفر (۱) ۔۔۔ عبد المتین منیری۔ بھٹکل

۔۱۷؍ ستمبر کی شام ساڑھے پانچ بجے بروڈا جنکشن پر ناگر کویل ، کارومنڈل اکسپرس رینگتے ہوئے داخل ہورہی تھی،اس پر یہاں  اس قافلہ  کو  سوار ہونا تھا، جس کی  منزل بھٹکل تھی، یہ قافلہ چھ افراد پر مشتمل تھا، ...

مزید پڑھیں »

چپلون اور باب دکن دابھول کی سیر(۰۲)۔۔۔ عبد المتین منیری۔ بھٹکل

چپلون سے دابھول کا راستہ چاروں طرف خوبصورت گھنے جنگلات سے بھرے پرےاونچے نیچے   پہاڑوں سے گھرا ہوا ہے، یہیں کہیں پانی کے آبشار بھی ہیں، جن سے بجلی بنانے کے لئے انرون کمپنی کا عظیم الشان پراجکٹ لگا ہوا ...

مزید پڑھیں »