بنیادی صفحہ / ڈاکٹرحنیف شباب

مصنف کی تحاریر : ڈاکٹرحنیف شباب

دعوتی کام کی پبلسٹی کرنے والو جاگو!۔۔بُرے دن آنے والے ہیں!! ۔۔از:ڈاکٹر محمد حنیف شبابؔ 

آنکھ جو کچھ دیکھتی ہے………..  ایک مسلمان کے لئے اپنے دین پر قائم رہنا احسن بات ہے ، لیکن دین کے قیام کے لئے غیر مسلموں میں دعوتی کام کرنامستحسن ترین اور دین کا مطلوب و مقصود کام ہے، جس ...

مزید پڑھیں »

مذبح کے لئے جانوروں کی فروخت پر پابندی۔۔ایک تیر سے کئی شکار (دوسری قسط)۔۔از: ڈاکٹر محمد حنیف شبابؔ

آنکھ جو کچھ دیکھتی ہے……….. یہ جو ذبح کرنے کے لئے گائے کے سنتان سے منسلک تمام بڑے جانوروں کے ساتھ اونٹ کو عام مارکیٹ میں فروخت کرنے کی پابندی کا قانون لاگو کیا جانے والا ہے اس پر ملک ...

مزید پڑھیں »

مذبح کے لئے جانوروں کی فروخت پر پابندی۔۔ایک تیر سے کئی شکار ۔۔از:ڈاکٹر محمد حنیف شبابؔ

آنکھ جو کچھ دیکھتی ہے……….. چلئے خدا خدا کرکے ہندوستان میں کسی کے تو اچھے دن آگئے!خواہ مخواہ لوگ چیخ وپکار مچائے ہوئے تھے کہ مودی سرکار نے اچھے دن کا جو وعدہ کیا تھا، وہ کبھی پورا ہونے والا ...

مزید پڑھیں »

امداد کیجیے، مگر غریبوں کو رُسوا تو نہ کیجیے!۔۔از:ڈاکٹر محمد حنیف شبابؔ

آنکھ جو کچھ دیکھتی ہے……….. دنیا میں انسانوں کے پاس مال و زر کی کمی و بیشی اورمعیشت کی مختلف تقسیم اللہ تعالیٰ کے طے کردہ نظام کے مطابق ہوتی ہے۔اگرکسی کے پاس مال کی زیادتی اور خوشحالی کا سامان ...

مزید پڑھیں »

پرسنل لاء صرف مسلمانوں کا مسئلہ تھوڑی ہے؟ !(تیسری اور آخری قسط)۔۔از:ڈاکٹر محمد حنیف شبابؔ 

آنکھ جو کچھ دیکھتی ہے………..  ایک طرف ایک ملک ،ایک طرح کی شہریت اور ایک قانون کے نام پرسرکار کی طرف سے ملک میں یونیفارم سول کوڈ کے لئے راہیں ہموار کرنے اور ماحول گرمانے کا کام ہورہا ہے۔ تو ...

مزید پڑھیں »

پرسنل لاء صرف مسلمانوں کا مسئلہ تھوڑی ہے؟ ! (دوسری قسط) ۔۔۔از:ڈاکٹر محمد حنیف شبابؔ 

اس مضمون کی سابقہ قسط میں اس طرف اشارہ کیا گیا تھاکہ ہندوستان کے مختلف صوبوں میں جدا جدانام اور شناخت کے ساتھ بسنے والے تقریباً 6,743 طبقات اور قبائل سے جڑے کروڑوں آدی واسی یکساں سول کوڈکے نفاذ کے ...

مزید پڑھیں »

کامن سول کوڈ صرف مسلمانوں کا مسئلہ تھوڑی ہے؟ !( پہلی قسط)۔۔۔از:ڈاکٹر محمد حنیف شبابؔ 

ہندوستان میں یونیفارم سول کوڈ کے نفاذ کی راہیں ہموار کرنے کی کوششوں کا سلسلہ کوئی نئی بات نہیں ہے۔ ایک زمانے سے یہ مسئلہ وقفے وقفے سے سر اٹھاتا اور سرخیوں میں اچھلتا رہا ہے۔مگر اب کے تشویش ضرور ...

مزید پڑھیں »