بنیادی صفحہ / مصنف کی تحاریر : مولاناسید ابوالحسن ندوی

مصنف کی تحاریر : مولاناسید ابوالحسن ندوی

میری علمی اور مطالعتی زندگی ۔ قسط 09۔۔۔۔۔ تحریر : مولانا سید ابو الحسن علی ندوی علیہ الرحمۃ

میرے معلم و مربی میرے برادر معظم ڈاکٹر سید عبدالعلی مرحوم، جن کی اصابت رائے، خداداد سلامتِ فکر، استقامت اور گہرا علم زندگی کی ہر منزل اور ہر موڑ پر میرا دستگیر رہا، برابر حضرت مجدد الف ثانی کے مکتوبات ...

مزید پڑھیں »

میری علمی و مطالعتی زندگی – قسط 08- تحریر : مولانا سید ابو الحسن علی ندوی علیہ الرحمۃ

مولانا سید سلیمان صاحب ندوی کی تمام تصنیفات نقدِ کاملِ عیار، اور علم و انشاء کے لحاظ سے معیار ہیں، لیکن اس بے بضاعت کو جس چیز نے سب سے زیادہ متأثر کیا وہ ’’خطبات مدراس‘‘ ہے۔ اگر کسی مصنف ...

مزید پڑھیں »

میری علمی اور مطالعتی زندگی ۔ قسط 07—-تحریر : مولانا سید ابو الحسن علی ندوی علیہ الرحمۃ

اب اس سے پہلے کہ میں اپنی آخری محسن و موثر کتابوں کا ذکر کروں، تاریخ ادوار کے لحاظ کے بغیر ان کتابوں اور تحریروں کا ذکر کرتا ہوں، جنہوں نے بعض خاص حیثیتوں سے دل و دماغ پر کوئی ...

مزید پڑھیں »

میری علمی و مطالعتی زندگی ۔قسط 06 —–تحریر : مولانا سید ابو الحسن ندوی

میری مدرسی تعلیم کا اختتام ہوچکا تھا اور آزاد مطالعہ کا آغاز، حافظ ابن قیمؒ کی ’’زاد المعاد‘‘ میرا کتب خانہ، میری رفیق سفر اور میری گویا اتالیق و معلم تھی۔ دینیات کے کتب خانہ کی اتنی بہترین نمائندگی ایک ...

مزید پڑھیں »

میری علمی و مطالعتی زندگی ۔قسط نمبر 5۔۔۔ از : مولانا سید ابو الحسن ندوی

یہ زمانہ دارالعلوم ندوۃ العلماء میں عربی کی بہار کا تھا۔ ادھر ہلالی صاحب کا فیض عام تھا، ادھر ہمارے دوست مولانا مسعود عالم ندوی عربی کا رسالہ ’’الضیاء‘‘ نکال رہے تھے، عربی زبان و تحریر، نقد و تبصرہ گویا اوڑھنا ...

مزید پڑھیں »

میری علمی و مطالعتی زندگی ۔ قسط نمبر 4

تحریر : مولانا سید ابو الحسن ندوی میری مکرر خوش قسمتی تھی کہ حدیث میں مولانا حیدر حسن خان صاحب جیسا متبحر استاد نصیب ہوا، جو غلام احمد صاحب لاہوری، مولانا لطف اللہ صاحب کوٹکی، مولانا احمد حسن صاحب کانپوری اور ...

مزید پڑھیں »

میری علمی و مطالعتی زندگی ۔ 03- مولانا سید ابو الحسن ندوی

 اردو مضمون نویسی میں ابتدائی اثر والد مرحوم کی کتاب ’’یادِ ایام ‘‘ کا تھا جو سنجیدہ زبان کا ایک شگفتہ نمونہ ہے، اور جس میں تاریخ کی متانت کے ساتھ، زبان کا بانکپن بھی موجود ہے جو میرے علم ...

مزید پڑھیں »

میری علمی اور مطالعتی زندگی ۔ 02- مولانا سید أبو الحسن ندوی

انہی دنوں کے کچھ بعد میرے ہاتھ میں مولانا شبلی مرحوم کی ’’الفاروق‘‘ آگئی۔ مطبع نامی کانپور کی چھپی ہوئی، سراپا تصویر، پڑھی اور کئی بار پڑھی۔ عراق کی جنگوں بویب، جمر، قادسیہ وغیرہ کے میدان جنگ کی تصویر مولانا ...

مزید پڑھیں »

میری علمی و مطالعاتی زندگی ۔ 01 – مولانا سید ابو الحسن ندوی

خاکسار کا خاندان ایک خزاں رسیدہ دینی خانوادہ ہے، جس کے بزرگوں نے کبھی فصل خزاں میں دنیا کو پیامِ بہار سنایا تھا، ہندوستان میں جب دین کی بہار آخر ہوئی تو اس خاندان پر تنزل آیا، ہوش کی آنکھیں ...

مزید پڑھیں »